بلیدہ میں پاکستانی فوج پر حملہ کر کے دس اہلکار ہلاک کیے ۔بی ایل ایف

ہفتہ 4 نومبر, 2017

کوئٹہ (ہمگام نیوز)بلوچستان لبریشن فرنٹ کے ترجمان گہرام بلوچ نے پاکستانی فوجی قافلے ،موبائل ٹاور وپہیہ جام ہڑتال کی خلاف ورزی کرنے والوں پر حملوں کی ذمہ داری قبول کرتے ہوئے کہا کہ بلیدہ کے علاقے الندور میں گھات لگائے سرمچاروں نے فوجی قافلے کی چار گاڑیوں کو بھاری و جدید ہتھیاروں سے نشانہ بنا کر دس سے زائد اہلکاروں کو ہلاک اور متعدد کو زخمی کیا۔کامیاب حملے کے بعد حواس باختہ فوج نے گن شپ ہیلی کاپٹروں کے ساتھ الندور و گرد نواح میں آبادی کا محاصرہ کر کے آپریشن کیا اور لوگوں کو تشدد کا نشانہ بنانے کے ساتھ لوٹ مار کی اور مارٹر فائر کئے جس سے دوست محمد بازار میں ایک گھر پر مارٹر گرنے سے ایک بچے کا ٹانگ ضائع اور دو معمولی زخمی ہوئے ہیں۔گہرام بلوچ نے مزید کہا کہ ہفتہ کے روز سرمچاروں نے تمپ میں وارد موبائل نیٹ ورک کے ٹاور کو تباہ کرنے کے ساتھ وہاں موجود تمام مشینری کو نذر آتش کر دیا۔آواران کے علاقے پیراندر میں پہیہ جام ہڑتال کی خلاف ورزی کرنے پر دو گاڑیوں کے ٹائر کو نشانہ بنایا،گزشتہ رات رخشان سی پیک روڈ پر سرمچاروں نے پہیہ جام ہڑتال کی خلاف ورزی پر گاڑیوں پر فائرنگ کرکے انکے ٹائر برسٹ کیے۔آج مغرب کے وقت مند ٹو دشت روڈ پر لوگوں کو پہیہ جام ہڑتال کے بارے میں آگاہی دی اور خلاف ورزی کرنے والی ایک گاڑی کے ٹائر برسٹ کئے۔

 

image_pdfimage_print

[whatsapp] خبریں. RSS 2.0