بی آر اے نے پاکستانی آرمی پر حملے کی ذمہ داری قبول کر لی۔

بدھ 10 دسمبر, 2014

کوئٹہ (ہمگام نیوز)ببلوچ ری پبلکن آرمی کے ترجمان سرباز بلوچ نے نامعلوم مقام سے سیٹلائیٹ فون کے ذریعے اخباری دفاتر سے بات کرتے ہوئے بتایا کہ بی آر اے کے سرمچاروں نے بدھ کے روز تربت کے روڈ کے قریب قابض فورسز کے سفید رنگ ڈبل کیبن ویگو گاڑی کو ریموٹ کنٹرول بم سے نشانہ بنایا حملے میں فورسز کے چار اہلکار ہلاک اور چار زخمی ہوئے ایک اور کاروائی میں ہمارے سرمچاروں نے ڈیرہ بگٹی کے علاقے ٹوبو میں فورسز کے چیک پوسٹ پر سنائپررافل سے حملہ کرکے ایک اہلکار کو ہلاک کردیا اس کے علاوہ تمپ کے علاقے میں ایف سی کے مرکزی چوکی پر گرنیڈ لانچروں اور خود کار ہتھیاروں سے حملہ کیا جس میں دشمن فوج کے متعدد اہلکاروں کو ہلاک و زخمی کئے۔ہم بلوچ قوم سے اپیل کرتے ہیں کو وہ پاکستان ریاستی املاک اور مقامی ایجنٹوں سے دور رہے جو کہیں بھی اور کسی بھی وقت سرمچاروں کے حملوں کے نشانہ میں بن سکتے ہیں۔ہماری کاروائیاں بلوچستان کی آزادی تک جاری رہے گے۔

image_pdfimage_print

[whatsapp] خبریں. RSS 2.0