رینجرز کا کراچی میں بی ایل اے کے تین عسکریت پسندوں کی ہلاکت کا دعویٰ

اتوار 16 اگست, 2015

کراچی(ہمگام نیوز)  سندھ کے دارالحکومت کراچی میں رینجرز نے مقابلے کے دوران بلوچ لبریشن آرمی (بی ایل اے) کے 3 عسکریت پسندوں کو ہلاک جبکہ ایک کو زخمی حالت میں گرفتار کرنے کا دعویٰ کیا ہے.

رینجرز کے ترجمان کے اعلامیے مطابق عسکریت پسندوں کی اطلاع پر ملیر میمن گوٹھ میں اسمعیل شاہ مزار کے علاقے میں کارروائی کے لیے اہلکار داخل ہوئے ، اس علاقے میں بی ایل اے کا مبینہ ٹھکانہ موجود تھا۔

رینجرز کی علاقے میں موجودگی پرعسکریت پسندوں نے فائرنگ شروع کردی، رینجرز کی جوابی فائرنگ کے نتیجے میں 3 عسکریت پسند ہلاک جبکہ ان کا ایک ساتھی زخمی ہوگیا۔

رینجرز سے مقابلے میں ہلاک ہونے والے عسکریت پسندوں کی شناخت زاہد، ناصر اور حبیب عرف فوجی کے نام سے ہوئی ہے جبکہ زخمی حالت میں گرفتار ہونے والا الٰہی بخش عرف گڈو ہے۔

رینجرز ترجمان کے مطابق ہلاک اور زخمی ہونے والے عسکریت پسند گھاروں کے علاقے میں ریلوے ٹریک پر حملے، 2010ء اور 2011ء میں حب چوکی کے علاقے میں چائینیز کے قتل، بھتہ، ٹارگٹ کلنگ، اغوا برائے تاوان اور کراچی میں بی ایل اے کو مدد فراہم کرنے کے جرائم میں ملوث ہے۔

image_pdfimage_print

[whatsapp] خبریں. RSS 2.0