سرمچار مہیم جھڑپ میں شہید ہوئے سرخ سلام پیش کرتے ہیں۔بی ایل ایف

جمعہ 27 نومبر, 2015

کوئٹہ (ہمگام نیوز)بلوچستان لبریشن فرنٹ کے ترجمان گہرام بلوچ نے سرمچار مہیم بلوچ عرف بہادر بلوچ کو سرخ سلام پیش کرتے ہوئے کہ نامعلوم مقام سے سیٹلائٹ فون کے ذریعے ا کہ انہوں نے 24 نومبر کو بسیمہ کے علاقے راغے بلوچ آباد میں قابض پاکستانی فوج سے بہادری سے لڑکر بلوچ وطن کی دفاع میں شہید ہوئے۔ وہ ایک عرصے سے بی ایل ایف کے پلیٹ فارم سے بلوچستان کی آزادی کی جنگ میں کئی محاذوں پر دشمن کو شکست سے دوچار کر چکا ہے۔ راغے بلوچ آباد میں پاکستانی فوج نے مہیم بلوچ و ساتھیوں کو گھیر کر حملہ کیا تو مہیم بلوچ نے اپنے ساتھیوں کو گھیرے سے نکال کر خود دشمن کا بہادری سے مقابلہ کرتے ہوئے شہید ہوئے۔ اس جھڑپ میں تین فوجی اہلکار ہلاک اور کئی زخمی ہوئے۔کل 25 نومبر کو ہوشاپ کے علاقے گونڈ سرین میں عسکری تعمیراتی کمپنی فرنٹیر ورکس آرگنائزیشن (ایف ڈبلیو او) کے اہلکاروں پر اس وقت حملہ کیا جب وہ چین پاکستان روڈ پر کام کر رہے تھے۔ حملے میں ایف ڈبلیو او کے دو اہلکار ہلاک اور کئی زخمی ہوئے۔ 24 نومبر کو ہی تمپ کے علاقے آزیان میں پاکستانی فورسز کے قافلے پر حملہ کرکے قابض فورسز کو بھاری جانی و مالی نقصان پہنچایا۔ یہ حملے بلوچستان کی آزادی تک جاری رہیں گے۔

image_pdfimage_print

[whatsapp] خبریں. RSS 2.0